June 24, 2017
You can use WP menu builder to build menus

سپین حکومت کے آرڈر نمبر جے یو ایس/1625/2016 کے مطابق ان پڑھ افراد سپینش نیشنلٹی کے دونوں امتحانات نہیں دیں گے۔ وزارت انصاف کے قانون آرٹیکل 10.5میں تبدیلی کرتے ہوئے ان پڑھ افراد کو انسٹیٹیوٹ سروانتے کے دونوں امتحانات سےمستثنی قرار دے دئے گئے ہیں۔ ان اس حوالہ سے وزارت انصاف میں ایک درخواست دینی ہو گی۔ جس میں وہ اپنے حوالہ سے خصوصی رعایت کی درخواست دیں گے۔ جب کہ سپینش میٹرک، ایعسو پاس کرنے والے افراد بھی دونوں امتحانات نہیں دیں گے۔ اور یہ افراد محکمہ تعلیم سے اپنے ایعسو پاس کرنے کا سرٹیفیکیٹ حاصل کرکے اپنی درخواست کے ساتھ جمع کروائیں گے۔ *** پاک فیڈریشن سپین کے ایمیگریشن وکیل کے مطابق، یہ قانون ہر ان پڑھ فرد کیلئے نہیں ہے۔ بلکہ صرف ان افراد کیلئے ہے جو کہ اپنی مادری زبان میں لکھ یا پڑھ نہ سکتے ہوں۔ البتہ وہ لوگ جو کہ اپنی مادری/قومی زبان میں لکھ پڑھ سکتے ہوں، وہ اس قانون سے فائدہ نہیں اٹھا سکتے۔ انہیں لازمی طور پر امتحان دینا ہوگا۔ اس قانون سے بزرگ شہری فائدہ اٹھا سکیں گے۔ وہیں اس قانون سے  وہ افراد جو کہ زبان کا امتحان دے چکے ہیں اور اس میں ناکام رہے ہوں وہ بھی فائدہ نہیں اٹھا سکیں گے۔ اور انہیں لازمی طور پر دوبارہ امتحان دینا ہو گا۔ اس حوالہ سے کسی بھی قسم کی رہنمائی کیلئے پاک فیڈریشن سپین کے جائنٹ سیکرٹری سعد مختار تارڑ سے واٹس اپ 632640374 یا اپنے وکیل سے رابطہ کیا جا سکتا ہے۔ اس حوالہ سے مزید رہنمائی کیلئے نیچے دی گئی ویڈیو بھی دیکھی جا سکتی ہے۔   

191108

Comments are closed.

error: Content is protected !!