August 21, 2017
You can use WP menu builder to build menus

بارسلونا میں ایک پاکستانی نے اپنی شادی پر لاکھوں یورو لٹا دئے۔ حیدر چوہدری نامی نوجوان کی شادی، بارسلونا میں سب سے امیر ہندوستانی میتل فیملی کی شادی کی طرح سپینش ذرائع ابلاغ کا مرکز نگاہ بنی رہی۔ تفصیلات کےمطابق برطانوی کاروباری گروپ بیسٹ وے ہولڈنگز سے تعلق رکھنے والی فیملی نے اپنے صاحبزادے کی شادی کیلئے بارسلونا کو چنا۔ شادی کی تین روزہ تقریبات کیلئے 350 مہمانوں کو بارسلونا اور اس کے مضافات میں پرائیویٹ رہائش گاہوں میں ٹھہرایا گیا تھا۔ شادی کی تقریب بارسلونا کے 'لوتجا دے مار' ہال میں ہوئی۔ جس میں مقامی پولیس کی اجازت کے مطابق دولہا ایک قدیم کار میں سوار ہو کر آیا۔ اور بعد ازاں اسے گھوڑے پر سوار کر کے ہال کے اندر پہنچایا گیا۔ جہاں پر شادی کی رسومات ادا کی گئیں۔ اس سے ایک رات قبل مہندی کی رسم ویلانووا دے بائیعس نامی گائوں میں ایک 40 ہیکٹر پر مشتمل 12 ویں صدی کےگھر میں ادا کی گئی۔ جبکہ تقریب کا آخری کھانا ، ولیمہ ہوٹل آرٹس میں دیا گیا۔ لاوانگواردیا اخبار کےمطابق، کھانا پکانے کیلئے خصوصی باورچی برطانیہ سے منگوائے گئے تھے۔ اور شادی کی تقریب کے انتظامات، یس آئی ڈو، نامی ایک کمپنی نے اپنے ذمہ لئے تھے۔ جبکہ کھانوں میں بین الاقوامی کھانوں کے علاوہ کتلان 'آلوئوں کا آملیٹ' اور ' چوءروز' پیش کی گئیں۔ پاک فیڈریشن سپین کے جنرل سیکرٹری راجہ بابر ناصر نے میتل فیملی کے بعد برطانوی نژاد پاکستانی فیملی کی جانب سے بارسلونا میں شادی کی تقریب کےانعقاد کو خوش آئند قرار دیا ہے۔ اور کہا ہےکہ اس طرح کی تقریبات سے جہاں بارسلونا کا نام، سیاحت کےحوالہ سے مشہور ہوتا ہے  وہیں بہترین تقریبات، آرگنائز کرنے کی صلاحیتوں کی بھی مشہوری ہوتی ہے۔ /ف۔ خاویر گومیز

Comments are closed.

error: Content is protected !!