June 24, 2017
You can use WP menu builder to build menus

یوروپول۔ سپین رینجرز۔ قومی پولیس سپین۔ محکمہ سوشل سکیورٹی ۔ محکمہ ٹیکس کے 250 اہلکاروں کے مالاگا۔ کادیز۔ باداخوز۔ الیکانتے اور سیبیعا میں مشترکہ چھاپوں میں گرفتار ہونے والے 25 پاکستانیوں کے خلاف تحقیقات 2011 اور 2012 میں شروع کر دی گئی تھیں۔ جب ان شہروں میں کم شرح فروخت کے حامل ڈونر کبابوں کی دکانیں کھلنی شروع ہوئیں۔ جن میں بغیر کاغذات کے حامل پاکستانی نوجوانوں کو ملازمت دی جاتی تھی۔ حکام کے نظر میں 3 مختلف ڈونر کباب کی چینز نظر آئیں۔ جن کے مالکان تو مختلف تھے۔ مگر تمام کا آپس میں بہت گہرا تعلق تھا۔ اس گروہ کی صرف کادیز ڈویژن میں ہی 14 ڈونر کباب دکانیں تھیں۔ جب کہ مالاگا۔ سیبیعا۔ قرطبہ۔ غرناطہ اور خائن ڈویژنز میں قائم دکانیں اس کے علاوہ تھیں۔ جو کہ 6 دیگر ڈونر کباب چینز کے تحت چلائی جا رہی تھیں۔ جب کہ اسی گروہ کی ملکیتی پھل بیچنے کی دکانیں کادیز اور مالاگا میں قائم کی گئیں تھیں۔ /ف۔ رومیتی

Comments are closed.

error: Content is protected !!